ترقیاتی منصوبوں پر کام میں تیزی

اسلام آباد: وزیر منصوبہ بندی اسد عمر نے ملک بھر میں ترقیاتی منصوبوں کے لئے فنڈز جاری کردیئے ، 200 سے زائد منصوبوں کے لیے700 ارب سے زائد پی ایس ڈی پی فنڈ خرچ کئے گئے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق وفاقی حکومت نے ترقیاتی منصوبوں پر کام کی رفتار تیز کردی، وزیر منصوبہ بندی اسد عمر نےملک بھر میں ترقیاتی منصوبوں کے لئے فنڈز جاری کئے .

جولائی 2019 سے فروری 2020 تک ترقیاتی بجٹ کاتناسب 6 سال میں سب سے زیادہ ہے ، گزشتہ 7 ماہ میں پبلک سیکٹر ڈویلپمنٹ فنڈز کا استعمال 39 فیصد ریکارڈ ہوا جبکہ پچھلے 6 سال کے دورانیے میں بجٹ کے استعمال کا سب سے زیادہ تناسب ریکارڈکیاگیا۔

سال 2014-15 میں ترقیاتی فنڈز کے استعمال کا تناسب صرف 32 فیصد تک تھا جبکہ سی پیک منصوبوں کو ترجیحی طور پر مالی اعانت فراہم کی جا رہی ہے ، کراچی کوسٹل پاور پراجیکٹ اوردیامیر بھاشا ڈیم ٹاپ 10سرفہرست منصوبوں میں شامل ہیں۔

داسواورنیلم جہلم ہائیڈرو پراجیکٹس سمیت تربیلا فورتھ ایکسٹینشن اور 309 ارب کی لاگت سے بننے والے مہمند ڈیم پر بھی کام شروع کردیا گیا ہے ، ہاؤسنگ منصوبے سمیت درختوں کی سونامی مہم پر بھی اربوں خرچ کیےگئے ہیں۔

کراچی سےپشاوراور لاہور سےملتان موٹروے کا منصوبہ بھی 10سرفہرست منصوبوں میں ہیں ، کراچی سےلاہوراورسکھر سےحیدر آباد موٹروےمنصوبے کے لیے بھی رقم خرچ کی گئی اور قراقرم ہائی وے فیز 2 منصوبے پر 24.2 ارب روپے خرچ ہوئے۔

ملک بھر میں آبپاشی کا نظام بہتر بنانے سمیت زرعی منصوبوں پر بھی خطیر رقم خرچ کی گئی ہےجبکہ فصلوں کی پیداوار,لائیو اسٹاک کی بہتری سمیت ماہی گیروں کی ترقی کے منصوبے بھی شامل ہیں۔

ملک کےنہری نظام کی بہتری کے لیےفیز 2 پر بھی 5.5 ارب خرچ کیےگئے جبکہ گزشتہ 6 ماہ میں پشاورتا کراچی موٹروے پر 17.7 ارب خرچ ہوئے۔




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں