اٹلی ، کرونا وائرس کے 14نئے مریضوں کی تصدیق

روم:اٹلی کے شمالی علاقے لومبارڈی میں نوول کرونا وائرس کے 14نئے کیسز کی تصدیق ہوئی ہے ، یہ بات حکام نے ٹیلی وژن پر ایک پریس کانفرنس کے دوران بتائی ۔14مصدقہ کیسز میں وہ 6 بھی شامل ہیں جن کا اعلان جمعہ کی صبح کیا گیا ، کیسز میں لومبارڈی کے دارالحکومت میلان کے قریب کوڈوگنو قصبے سے تعلق رکھنے والا 38سالہ اطالوی شخص اور اس کے 5قریبی رشتہ دار اور دوست شامل ہیں۔اس شخص نے ایک دوست کے ساتھ وقت گزارا جو 21جنوری کو چین کے سفر سے واپس آیا تھا ۔لومبارڈی علاقائی کونسل کے ایک رکن برائے فلاحی بہبود جیو لیو گلیرا نے ٹیلی وژن پر دکھائی گئی ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ ہم نے مزید 8کیسز کی شناخت کی ہے جن میں کوڈوگنو ہسپتال کے 3مریض ،5ڈاکٹرز اور نرسز شامل ہیں۔وزیر صحت روبرٹو سپرنزا نے کوڈوگنو سمیت 10قصبات میں لاک ڈان کے اقدامات کا اعلان کیا ۔انہوں نے بتایا کہ ہمیں ان علاقوں کو محدود کرنے کی ضرورت ہے کیونکہ لازمی طور پر ہمیں اگلے گھنٹوں میں یہ ہدف حاصل کرنا ہے کہ وائرس کو ایک مخصوص جغرافیائی علاقے تک محدود کیا جائے ۔وزیر صحت نے بتایا کہ اس مقصد کے لئے 10قصبوں میں عوامی سرگرمیاں، کھیلوں کی تقریبات منسوخ کی گئی ہیں جہاں اسکول ،دکانیں اور ریسٹورنٹس کو بند کیا جاسکے اور لوگوں سے کہا جائے کہ وہ گھروں میں محدود رہیں۔سپرنزا نے کہا کہ ہم یہ مطالبہ کر رہے ہیں کہ ہر شخص جو وائرس سے متاثرہ علاقے سے آیا ہو رضاکارانہ طور پر گھر میں ہی رہے۔
جمہوریہ کوریا نے کرونا وائرس کے مزید 142 کیسز کی تصدیق کی ہے جس کے بعد وائرس میں مبتلا مریضوں کی مجموعی تعداد 346 ہو گئی ہے۔ہفتہ کو مقامی وقت کے مطابق صبح 9 بجے تک وائرس کے 346 کیسز رپورٹ ہوئے جن میں گزشتہ دن کے 142 کیسز بھی شامل ہیں۔کوریا کا مرکز برائے انسداد امراض و احتیاط(کے سی ڈی سی)روزانہ مقامی وقت کے مطابق 2 مرتبہ صبح 10 بجے اور شام 5بجے اعدادوشمار کا اعلان کررہا ہے۔نئے مریضوں میں سے 131 دارالحکومت سیئول سے 300 کلومیٹر دور شمال مشرقی علاقہ ڈیگو اور شمالی صوبہ گیانگ سنگ کے گردونواح کے رہائشی ہیں۔شمالی گیانگ سنگ اور ڈیگو میں متاثرہ افراد کی تعداد گزشتہ ایک دن میں 152 سے بڑھ کر 283 تک پہنچ چکی ہے۔مجموعی طور پر 169 کیسز کا تعلق ڈیگو کے اقلیتی عیسائی فرقہ سنشیانجی کی چرچ سروس سے ہے۔دیگر 108 کیسز ڈیگو کی شمالی کاؤنٹی چھیونگ دو کے ڈینام اسپتال سے سامنے آئے ہیں۔اسپتال میں کرونا وائرس سے پہلی اور دوسری موت بدھ اور جمعہ کو ہوئی۔بدھ اور جمعہ کو 173 نئے کیسز سامنے آنے کے بعد ان دنوں وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد تیزی سے بڑھ گئی ہے۔ڈیگو اور چھیونگ دو کو جمعہ کے روز خصوصی انتظامی علاقہ قرار دے دیا گیا ہے جبکہ سیئول میں تمام احتجاجی ریلیوں پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔محکمہ صحت نے چار سطح کے انتباہی نظام میں وائرس کو دوسرا انتہائی درجہ نارنجی قرار دیا اور ہنگامی بنیادوں پر انتہائی درجہ یعنی سرخ کی سطح پر اقدامات اٹھانے کے عزم کے اظہار کیا ہے۔3 جنوری کے بعد ملک بھر میں 19ہزار افراد کے کرونا وائرس کے ٹیسٹ کیے جا چکے ہیں جن میں 13794 افراد کے ٹیسٹ منفی آئے ہیں جبکہ 5481 افراد کی نگرانی کی جا رہی ہے۔
نوول کرونا وائرس کے مرکز صوبہ ہوبے میں جمعہ کو 366نئے مریض اور 106نئی اموات رپورٹ ہوئی ہے ، صوبائی صحت کمیشن نے یہ بات ہفتہ کے روز بتائی ہے ۔تازہ رپورٹس سے شدید متاثرہ صوبہ میں کرونا وائرس کے مصدقہ مریضوں کی تعداد63ہزار454ہوگئی ہے ۔صوبائی صدر مقام ووہان سے جمعہ کو 314نئے مصدقہ کیسز اور90نئی اموات رپورٹ ہوئیں ،اسی طرح شہر میں کل مصدقہ مریضوں کی تعداد 45ہزار 660اور اموات کی تعداد 1ہزار774 ہوگئی ہے ۔صوبہ میں جمعہ کے روز 1ہزار767مریضوں کو صحت یاب ہو نے کے بعد ہسپتال سے فارغ کیا گیا جس سے صوبہ میں صحت مند ہونے والے کل مریضوں کی تعداد 13ہزار557ہوگئی ہے ۔ہسپتال میں داخل 41ہزار36مریضوں میں سے 8ہزار4سو مریضوں کی حالت خراب ہے جبکہ دیگر 2ہزار492مریضوں کی حالت تشویش ناک ہے ۔کمیشن نے یہ بھی بتایا ہے کہ ہوبے میں جمعہ کو 4ہزار490مشتبہ کیسز رپورٹ ہوئے جن میں سے 677مشتبہ کیسوں کو خارج کیا گیا جبکہ 1ہزار125کو داخل کرایا گیا ہے ۔
چین میں قومی صحت کمیشن کے مطابق ہفتہ کو صحت یاب ہو کر ہسپتالوں سے فارغ ہونے والے نوول کرونا وائرس کے مریضوں کی تعداد مسلسل چوتھے روز وائرس سے متاثرہ نئے مریضوں سے بڑھ گئی ہے۔کمیشن کی جانب سے اعدادوشمار سے بتایا گیا ہے کہ جمعہ کے روز 2393 افراد صحت یاب ہونے کے بعدہسپتال سے فارغ کئے گئے جو اسی روز وائرس سے متاثرہ نئے مصدقہ کیسز کی تعداد سے بہت زیادہ ہے جوکہ 397 تھی۔کمیشن کے مطابق جمعہ کے اختتام تک مجموعی طور پر 20 ہزار 659 مریضوں کو صحت یاب ہونے کے بعد ہسپتال سے فارغ کیا گیا۔جمعہ مسلسل تیسرا دن تھا جب چین میں وائرس سے متاثرہ نئے مریضوں کی تعداد 1000 سے کم تھی۔اعداد وشمار کے مطابق صوبہ ہوبے اور اس کے دارالحکومت ووہان میں کرونا وائرس سے صحت یاب ہونے والے مریضوں کی تعداد وائرس کے نئے کیسز سے بہت زیادہ ہے۔




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں