غذرمیں مضر صحت مچھلیوں کی فروخت کا سلسلہ جاری

غذر:غذرکی چاروں تحصیلوں اور ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر گاہکوچ میں مضر صحت مچھلیوں کی فروخت کا سلسلہ جاری، انتظامیہ کی طرف سے خاموشی کی وجہ ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر گاہکوچ اور غذر کی چاروں تحصیل پونیال ، اشکومن ،گوپس اور یاسین میں مضر صحت مچھلی فروخت کرنے کا سلسلہ جاری ہے، باسی مچھلیوں کو ڈرموں میں بھر کر روالپنڈی سے بسوں کی چھتوں میں رکھ کر گلگت پہنچایا جاتا ہے ،وہاں سے سوزوکی گاڑیوں میں غذر لاکر ان مضر صحت مچھلیوں کو فروخت کیا جاتا ہے ،ایک سال قبل چار من سے زائد مضر صحت مچھلیوں کو انتظامیہ نے تلف کیا تھا مگر اب بھی مضرصحت مچھلیوں کو فروخت کرنے والا گینگ سرگرم ہوگیا ہے اور غذر کے ہیڈ کوارٹر گاہکوچ کے علاوہ چاروں تحصیلوں میں یہ پرانی مچھلیوں کو کھلے عام فروخت کیا جاتا ہے ،یہ مچھلیاں جگلوٹ اور گلگت سے لانے کا کہہ کر عوام کو فروخت کرتے تھے مگر اصل حقیقت یہ ہے کہ یہ مچھلیاں جگلوٹ سے نہیں بلکہ روالپنڈی سے منگواتے ہیں اور روالپنڈی میں ان کا بندہ بس کی چھتوں پر پلاسٹک کے ڈرموں میں ڈالکر انھیں گلگت پہنچاتاہے اور وہ غذر لاکر انھیں فروخت کرتے ہیں روالپنڈی سے گلگت اور وہاں سے غذر لاکر فروخت کرنے تک تین سے چار دن لگ جاتے ہیں گلگت میں ان مچھلیوں کی فروخت پر پابندی کے بعد اپ اس گینگ نے غذر لاکر ان مضر صحت مچھلیوں کی فروخت کا سلسلہ شروع کر دیا ہے مگر انتظامیہ کی خاموشی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے ان افراد نے پورے ضلع میں ان باسی مچھلیوں کی فروخت کا سلسلہ شروع کر دیا ہے جہاں بعض دکاندار ان سے تھوک کے حساب سے خرید کر ان مضر صحت مچھلی کو لوکل مچھلی کا نام دیکر لوگوں کو فروخت کرتے ہیں اس وقت یہ مضر صحت مچھلیاں بڑی مقدار میں دکانداروں کے پاس موجود ہیں اور کھلے عام فروخت ہورہے ہیں مگر ان سے کوئی پوچھنے والا نہیں ۔




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں