اسد عمرکی برطانوی ہائی کمشنر سے ملاقات

اسلام آباد :وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی اسد عمر نے کہا ہے کہ آئی ایم ایف اصلاحات کے نتیجے میں پاکستانی معیشت کو استحکام حاصل ہوا، مستقبل قریب میں مہنگائی کی شرح میں مزید کمی واقع ہو گی، پاکستان معیشت کے نئے شعبوں انفارمیشن ٹیکنالوجی، مواصلات اور ہنر سازی میں برطانوی تعاون کا خواہاں ہے۔ تفصیلات کے مطابق ان خیالات کا اظہار انہوں نے برطانوی ہائی کمشنر ڈاکٹر کرسچن ٹرنر سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ ملاقات میں اقتصادی، ثقافتی اور تعلیمی شعبوں میں تعاون کو مزید فروغ دینے کے عزم کا اعادہ کیا گیا۔ اس موقع پر وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان پائیدار ترقی کی راہ پر گامزن ہے۔ انہوں نے کہا کہ سی پیک کے دوسرا مرحلہ میں برطانوی سرمایہ کاروں کو سرمایہ کاری کے بہترین مواقع میسر ہونگے ۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان معیشت کے نئے شعبوں انفارمیشن ٹیکنالوجی، مواصلات اور ہنر سازی میں برطانوی تعاون کا خواہاں ہے، اصلاحات کا عمل کامیابی سے جاری ہے۔وفاقی وزیر اسد عمر نے کہا کہ آئی ایم ایف اصلاحات کے نتیجے میں پاکستانی معیشت کو استحکام حاصل ہوا، مستقبل قریب میں مہنگائی کی شرح میں مزید کمی واقع ہو گی۔ اس موقع پر برطانوی ہائی کمشنر ڈاکٹر کرسچن ٹرنر نے کہا کہ برطانیہ پاکستان میں صاف توانائی، صحت، اور سیاحت کے شعبوں میں سرمایہ کاری کا خواہاں ہے۔




اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں